بنیادی صفحہ » برطانیہ » برطانیہ کے تاریخی شہر کیمبرج میں یورپ کی پہلی ماحول دوست مسجد

برطانیہ کے تاریخی شہر کیمبرج میں یورپ کی پہلی ماحول دوست مسجد

برطانیہ کے تاریخی شہر کیمبرج میں یورپ کی پہلی ماحول دوست مسجد

 

کیمبرج (رپورٹ :فیصل حسنین زیدی ) برطانیہ کے تاریخی شہر کیمبرج میں یورپ کی پہلی ماحول دوست مسجد نمازیوں کے لیے کھول دی گئی۔ 2 کروڑ 30لاکھ پاونڈ کی لاگت سے تعمیر کی گئی کیمبرج سینٹرل مسجد تقریباً 12 برس میں مکمل ہوئی۔ اس مسجد کے آرکیٹکٹ کہتے ہیں کہ یہ اکیسویں صدی کے برطانیہ میں اسلام کا ثقافتی پل ثابت ہو گی۔ مسجد کی ٹرسٹ کے ترجمان ڈاکٹر عبدالحکیم کہتے ہیں کہ ایک اندازے کے مطابق کیمبرج کے 6ہزار مسلمان رہائشی شہر میں بنائی گئی نجی رہایش گاہوں، چھوٹی چھوٹی مساجد یا گنجائش سے زیادہ بھرے ہوئے اسلامک سینٹروں میں نماز ادا کرتے تھے، اس لیے کیمبرج میں ایک مکمل مسجد کی اشد ضرورت تھی۔ اس مسجد میں نماز پڑھنے کے لیے یہاں کے مسلمانوں کو ایک لمبا انتظار کرنا پڑا اور راستے میں کئی مسائل بھی آئے۔ پہلے تو کیمبرج جیسے پھلتے پھولتے شہر میں اتنی بڑی جگہ کا حصول ہی ایک بڑا مسئلہ تھا، پھر اتنے بڑے منصوبے کے لیے رقم امتحان تھا، لیکن سب سے بڑا مسئلہ اتنی بڑی مسجد کی شہر کے بیچوں بیچ تعمیر کی مخالفت تھی۔ 2011ءمیں مسجد کے قریب گھروں میں نامعلوم افراد نے پمفلٹ تقسیم کیے، جن پر لکھا تھا کہ اس کی مخالفت کریں، کیوں کہ اس سے اس جگہ پر بہت زیادہ ہجوم ہو جائے گا۔ یہاں رہنے والوں کو یہ بھی تشویش تھی کہ یہاں بڑی اونچی عمارت تعمیر کی جائے گی، لیکن جب انہیں بتایا گیا کہ ایسا کچھ نہیں تو بہت کم لوگوں نے اس کی مخالفت کی۔ کیمبرج سٹی کونسل کے مطابق اس کو مسجد کے منصوبے کی مخالفت میں 50 خط ملے، جب کہ اس کی حمایت میں 200 خط موصول ہوئے۔ کیمبرج کے رہایشی مجید شیخ کہتے ہیں کہ ایک مسئلہ مسجد کے ٹرسٹیز نے بھی اٹھایا تھا، جب انہوں نے کہا کہ مسجد کا ڈیزائن ٹھیک نہیں اور یہ بالکل مسجد جیسا نہیں لگتا۔ لیکن ٹرسٹ کے چیئرمین ڈٹے رہے۔

تعارف: Admin

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*

x

Check Also

اولڈہم کے مئیر کونسلر جاوید اقبال نے ڈاکٹر عبد الحفیظ اور ڈاکٹر ریاض الفلوجی کو تعریفی سرٹیفکیٹ سے نوازا۔

اولڈہم کے مئیر کونسلر جاوید اقبال نے ڈاکٹر عبد الحفیظ اور ڈاکٹر ریاض الفلوجی کو ...