بنیادی صفحہ » صدائےکشمیر » کشمیریوں سے بھرپور اظہار یکجہتی برلن میں فرینڈز آف کشمیر کا احتجاجی مظاہرہ

کشمیریوں سے بھرپور اظہار یکجہتی برلن میں فرینڈز آف کشمیر کا احتجاجی مظاہرہ

برلن رپورٹ مطیع اللہ

کشمیریوں سے بھرپور اظہار یکجہتی کے لیے یوم یکجہتی کشمیر کے حوالے سے  ہفتے کو برلن میں فرینڈز آف کشمیر نے احتجاجی مظاہرہ کیا گیا مظاہرین نے جرمن باشندوں میں ہنڈبل تقسیم کئے اوربھارتی مظالم سے اگاہی مہم چلائی

فرینڈز آف کشمیر کے رہنماؤں نے خطاب کرتے ھوئے کہا کہ پاکستان سفارتی، اخلاقی اور میڈیا مہم جوئی کے ساتھ ساتھ کشمیریوں کی ہر میدان میں ساتھ کھڑے ہیں ،بھارتی مظالم نے ہٹلر کو بھی شرمندہ کردیا ھے

عوامی تحریک برلن کے رہنما خضر حیات تارڑ نے کہا کہ  بھارت جس طرح عالمی قوانین کی دھجیاں اڑا کر ،کشمیری عوام کی نسل کشی کررہا ہے ،پیلٹ کے ذریعے معصوم بچوں ،بچیوں اور بزرگوں کی بینائی چھین رہا ہے ۔انسانی حقوق کی بد ترین پامالی کا مرتکب ہورہا ہے اس ظلم کی جتنی مذمت کی جائے کم ھے ہم اقوام متحدہ سے مطالبہ کرتے ھے کہ کشمیریوں حق خود

منہاج القران کے صدر صدیق اکبر نے کہا کہ بھارتی فورسز آئے روز کشمیری عوام کے مکانات ،دکانیں اور تعمیرات خاکستر کررہی ہیں اور اس طرح معاشی بد حالی بھی مسلط کرکے تحریک آزادی کشمیر کو کمزور کرنے کے حربے آزمائے جارہے ہیں۔ انسانی سمیت عالمی برادری کو اس معاملے کی طرف بھی توجہ دینے کی ضرورت ہے۔

پیپلزپارٹی برلن کے صدر منظور اعوان نے کہا کہ کشمیر عوام پر 8 لاکھ قابض بھارتی فورسز کے ساتھ ہر گلی کوچے میں نبرد آزما ہیں۔انہوں نے کہا کہ یوم یکجہتی کشمیر منانے کا مقصد عالم اقوام کی توجہ مسئلہ کشمیر کے حل اور کشمیریوں کو حق خود ارادیت دینے کی جانب مبذول کرانا ہے،کشمیر کا مسئلہ برسوں سے اقوام متحدہ میں ہے۔ مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ کی منظور شدہ قراردادوں کے مطابق حل کرنے کے لیے کئی قراردادیں بھی منظور کی گئیں، لیکن ان پر عمل درآمد آج تک نہیں ہو سکا اور یہ صورتحال عالمی ادارے کی ساکھ کے لیے بڑا امتحان ہے

آج پوری قوم کشمیریوں کو یقین دلاتی ہے کہ آزادی کی جدوجہد میں وہ خود کو تنہا نہ سمجھیں ، پاکستان کے عوام اور بچہ بچہ کشمیریوں کے ساتھ ہے اور زندگی کے آخری لمحے اور خون کے آخری قطرے تک کشمیریوں کے ساتھ رہیں گے

اسلامی تحریک کے امیر خالد محمود نے کشمیری عوام تکمیل پاکستان اور دفاع پاکستان کی جنگ لڑ رہے ہیں ، سرسبز و شاداب پاکستان کشمیر سے آنے والے پانیوں کی بدولت ہی سرسبز ہے ، کشمیریوں نے آزادی کے لیے لازوال قربانیاں دی ہیں ۔گزشتہ 28سال میں 95ہزار سے زائد کشمیری شہید ہوچکے ہیں ۔ ہر دن 3 سے 4 کشمیری نوجوان جام شہادت نوش کرتے ہیں ۔15ہزار سے زائد خواتین کی اجتماعی بے حرمتی کی گئی ہے ، اب تک8ہزار سے زائد نوجوان لاپتا ہیں اور بے شمار نوجوان عقوبت خانوں میں مظالم سہ رہے ہیں ۔کشمیر کا ہر چوک اور درودیوار خون آلود ہے ، مساجد اور گھروں کے سامنے بھارتی افواج کھڑی ہیں ، 7لاکھ سے زائد فوج وادی میں موجود ہے۔ 11کشمیریوں پر ایک بھارتی فوجی تعینات ہے اس کے باوجود کشمیریوں کا صرف ایک ہی نعرہ ہے کہ ’’کشمیر بنے گا پاکستان ‘‘ کشمیری پاکستان سے الحاق چاہتے ہیں اور شہادت کے وقت بھی ان کی زبان پر صرف یہ الفاظ ہوتے ہیں کہ پاکستان ہمارا ہے ، ہم پاکستانی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کشمیر کا 2 ممالک کے درمیان کوئی سرحدی تنازع نہیں بلکہ وہ پاکستان کا حصہ ہے ، بھارت نے اس پر غاصبانہ قبضہ کیا ہوا ہے اور اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق کشمیریوں کو استصواب رائے کا حق ملنا چاہیے اور ان کو آزادانہ رائے شماری کے ذریعے اپنے مستقبل کا فیصلہ کرنا ہے مگر بھارت ان کو یہ حق دینے پر تیار نہیں ہے اور ریاستی و فوجی طاقت کے بل پر ان کو اپنا غلام بنائے رکھنا چاہتا ہے لیکن کشمیری بھارت کی غلامی قبول کرنے پر تیار نہیں ہیں اور بے سروسامانی کے عالم میں مسلسل برسرپیکار ہے

یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر پاکستان کے تمام سیاسی جماعتوں نے سیاسی وابستگیوں سے بالاتر ہوکر فرینڈز اف کشمیر کے نام سے ایک جان ھوکر احجاجی مظاہرہ کیا مظاہرین نے پلے کارڈز اور بینرز اٹھائے ھوئے اجس پر بھارتی مظالم کی داستانیں درج تھی

مظاہرین نے بازار اور اس پاس کے علاقوں میں کشمیریوں پر ڈھائے گئے بھارتی مظالم و جبرو تشدد پر مبنی ہنڈبلز تقسیم کئے گئے

مظاہرے میں منہاج القران.  عوامی تحریک،  اسلامی تحریک،  پیپلزپارٹی،  مسلم لیگ اور پی ٹی ائی سمیت طلبہ نے بھر پور شرکت کی

تعارف: Admin

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*

x

Check Also

فرینکفرٹ میں پاکستانیوں کی امن ریلی اور کشمیریوں کے ساتھ فقید المثال اظہار یکجہتی  (

فرینکفرٹ میں پاکستانیوں کی امن ریلی اور کشمیریوں کے ساتھ فقید المثال اظہار یکجہتی (منور ...