بنیادی صفحہ » پاکستان » جامعہ کراچی کی رصدگاہ میں موجود جرمن ساختہ ٹیلی اسکوپ کچرے کی نذر

جامعہ کراچی کی رصدگاہ میں موجود جرمن ساختہ ٹیلی اسکوپ کچرے کی نذر

جامعہ کراچی کی رصدگاہ میں موجود جرمن ساختہ ٹیلی اسکوپ کچرے کی نذر

کراچی: جامعہ کراچی کی رصدگاہ Observatoryکی کئی سالہ بندش کے بعد اب ’’آبزرویٹری‘‘میں60کی دہائی میں نصب کی گئی جرمن ساختہ نادرونایاب’’ٹیلی اسکوپ‘‘کچرے کے ڈھیرکی نذر کردی گئی ہے۔

تاریخی اہمیت کی حامل ٹیلی اسکوپ ناصرف زمین کی حرکت کواپنی حرکت اورلینس سے Synchronizationکرنے کی صلاحیت رکھتی ہے بلکہ اس کے لینس بیک وقت پورے آسمان کواسکین بھی کرسکتے ہیں۔

ٹیلی اسکوپ کوپہلے توزلزے سے محفوظ پلر سے اتارکررصد گاہ کے ایک کمرے میں رکھ دیاگیااوراب ٹیلی اسکوپ کے لینس نکال کرعلیحدہ کردیے گئے ہیں جبکہ اس کی انتہائی قیمتی موٹر، ڈھانچہ اوردیگراشیا رسدگاہ کے صحن میں دیگراشیا اورکوڑے کے درمیان پڑی ہے جو یونیورسٹی انتظامیہ کی نااہلی اورنادرونایاب سائنسی آلات و اشیا سے نابلد ہونے کی تصویر پیش کررہی ہے

تعارف: Admin

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*

x

Check Also

سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے منصوبہ بندی نے سی پیک فنڈزکے 24ارب روپے ارکان اسمبلی کونہ دینے جبکہ نئی گج ڈیم اورکے فور کی لاگت بڑھنے پرتحقیقات کی ہدایت

اسلام آباد: سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے منصوبہ بندی نے سی پیک فنڈزکے 24ارب روپے ارکان ...