بنیادی صفحہ » پاکستان » دلی کی ’چورنیاں‘

دلی کی ’چورنیاں‘

دلی پولیس نے پچھلے مہینے 9 دسمبر 2017 کو دو لڑکیوں کے ایک گینگ کو پکڑا جو گھروں میں کام کرتی تھیں، لیکن موقع دیکھ کر رفوچکر ہو جاتی تھیں۔ ان میں سے ایک نے پٹیل نگر کے گھر سے 10 لاکھ روپے کی چوری کی اور پولیس کو بتایا کہ وہ بھی اپنے مالک کی طرح پراپرٹی ڈیلر بننا چاہتی تھیں۔

لیکن یہ کوئی پہلا ایسا معاملہ نہیں ہے۔ اگر آپ سوچتے ہیں کہ ساری چوریاں چور کرتے ہیں تو ایسا نہیں ہے۔ کیونکہ دلی میں ’چورنیوں‘ کے گینگ بھی کام کرتے ہیں۔

انڈیا میں تو شادیاں لائف ٹائم اچیومینٹ ایوارڈ کی طرح منائی جاتی ہیں۔ چاہے متوسط طبقے کی ہوں یا امیروں کی۔ شادی یا تو ٹینٹ لگا کر کی جاتی ہے یا پھر کسی فائیو سٹار ہوٹل میں۔ کوں خیال کرتا ہے کہ شادی میں کون آ رہا ہے، کون کھا رہا ہے، کون چرا رہا ہے!

تین لڑکیاں، مہنگے برینڈ کے کپڑے پہنے ہوئے، سجی دھجی کسی فائیو سٹار ہوٹل کی شادی میں جائیں تو کس کو شک ہوگا کہ یہ ‘کام’ پر نکلی ہیں اور بڑا ہاتھ صاف کرنے کے چکر میں ہیں؟ شادیوں پر ٹکٹ یا پاس تو ہوتا نہیں کہ کوئی دکھانے کو پی کہہ دے۔

اگر آپ کو یہ بتایا جائے کہ یہ تین لڑکیاں انپڑھ ہیں، مدھیہ پردیش کے راجگڑھ کے گلکھیڑی گاؤں کی ہیں، تو کیا تب بھی آپ اس بات پر یقین کریں گے کہ یہ گروہ 6-7 فائیو سٹار ہوٹلز میں ہونے والی شادیوں میں بھاری مال چرانے میں کامیاب ہوا؟

تعارف: Admin

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*

x

Check Also

گورنر پنجاب چوہدری سرور کی استعفی طلب کیے جانے کی خبروں کی تردید

پاکپتن Oc گورنر پنجاب چوہدری سرور نے پاکپتن پہنچ کر دربار بابا فرید پر حاضری ...